ظلم ہوا ہے

نوبیاہتا بیوی اپنے باپ کو دیکھتے ہی رونے لگی۔ باپ نے کہا۔ "کیا ہوا بیٹی، کیوں رو رہی ہو؟”

"اباجی! مجھے دھوکا دیا گیا ہے مجھے اندھیرے میں رکھا گیا ہے، میرے ساتھ بد دیانتی کی گئی ہے۔” بیٹی نے روتے ہوئے کہا۔ "جس آدمی سے میری شادی ہوئی ہے وہ پہلے سے شادی شدہ ہے اور اس کے پانچ بچے بھی ہیں۔”

باپ نے بیٹی کو تسلی دیتے ہوئے کہا۔ "ہاں بیٹی! واقعی تم پر بڑا ظلم ہوا ہے۔”؎

بیٹی نے ہچکیاں لیتے ہوئے کہا۔ "نہ صرف میرے ساتھ ظلم ہوا ہے بلکہ میرے چھ بچوں کے ساتھ بھی زیادتی ہوئی ہے۔”