بندوبست کرو

کمپنی کے مالک نے اپنے سیلز مین کو بدحالی میں دیکھا تو ڈانٹا۔ "تم نے اپنی حالت دیکھی ہے؟ قمیض کے بٹن غائب ہیں، آستین پھٹی ہوئی ہے، کپڑے بغیر استری کے، کیا ہماری کمپنی کے نمائندے کو یہ حلیہ زیب دیتا ہے؟”

"نہیں جناب۔” سیلز مین نے سر جھکاتے ہوئے کہا۔

"تو تمہیں اس سلسلے میں فوری قدم اٹھانا چاہیئے۔” کمپنی کے مالک نے کہا۔ "یا تو شادی کرلو اور اگر شادی شدہ ہو تو طلاق کا بندوبست کرو۔”