کیل مہاسوں سے چھٹکارا حاصل کرنے کے قدرتی طریقے

چہرہ آپ کی شخصیت کا عکاس ہے ۔ چہرے کی خوبصورتی موسمی اثرات اور ماحولیاتی آلودگی سے ماند پڑ جاتی ہے۔ داغ دھبے دانے اور کیل مہاسے چہرے کی جلد کو بدنما بنا دیتے ہیں۔ اکثر لوگ داغ دھبوں اور کیل مہاسوں سے نجات حاصل کرنے کے لئے بازار میں موجود مہنگی کریموں اور لوشن کا سہارا لیتے ہیں لیکن بہتر یہ ہی ہے کے پہلے گھریلو ٹوٹکوں کا استعمال کیا جائے تاکہ آپ کی جلد ہر طرح کے سائڈ افیکٹس سے محفوظ رہ سکے۔

دہی

دہی کا پیسٹ کیل مہاسے دور کرنے کا بہترین نسخہ ہے۔ایک چمچ بیسن میں ایک چمچ دہی ، چٹکی بھر ہلدی اور چند قطرے لیموں کا رس شامل کر کے پیسٹ بنا لیں اور ہفتے میں لازماً ایک بار چہرے پر لگائیں۔ پ15 منٹ بعد دھو لیں ،آپ کو بہت جلد نتائج نظر آئیں گے ۔

ہرا دھنیا

ایک چمچ ہرے دھنیے کے رس میں ایک چٹکی ہلدی اور دو قطرے زیتون کا تیل شامل کریں۔ چہرے کو دھو کرخشک کرنے کےبعد اس آمیزے کو دانوں پر لگائیں۔یہ عمل دو ہفتے تک دن میں ایک بار کریں ۔ ہرا دھنیا ہمیشہ تازہ استعمال کریں۔

انڈے کی سفیدی

انڈے میں سے زردی ہٹا کے صرف سفیدی کو اچھی طرح پھینٹ کے چہرے پر 15منٹ تک لگانے سے چہرے کے دانے چند دنوں میں ہی صاف ہو جاتے ہیں ۔

ملتانی مٹی

ملتانی مٹی کا پیسٹ بنا کے جلد پر لگانے سے دانوں اور کیل مہاسوں کا خاتمہ ہو جاتا ہے۔ یہ ماسک چکنی جلد والے افراد کے لئے نہایت موثر ثابت ہوتا ہے ۔

ایلو ویرا

ایلو ویرا کا گودا چہرے پر لگائیں اور خشک ہونے پر منہ دھو لیں۔ایلو ویرا خشک جلد کو موائسچرائز کرتا ہے۔ اس کے استعمال سے جلد کی خشکی ختم ہو جاتی ہے اور دانے بھی کم ہو جاتے ہیں ۔

شہد

شہد صرف کھانے میں مزیدار ہی نہیں بلکہ یہ جلد پر لگانے کے لیے بھی استعمال کیا جا سکتا ہے۔ شہد ایک قدرتی اینٹی بائیوٹک ہے جو حیرت انگیز طور پر دانوں کا علاج کرتا ہے اور انہیں بڑھنے سے بھی روکتا ہے ۔ 2 کھانے کے چمچ شہد میں 1 چائے کا چمچ پسی دار چینی ملا کر چہرے پر لگائیں ۔ پندرہ منٹ بعد چہرہ ٹھنڈے پانی سے دھولیں ۔

کھیرا یا ککڑی

کھیرے آنکھوں کی سوجن کو کم کرنے کیلئے مقبول ہیں ۔کھیرے اور ککڑی میں سوزش دور کرنے کی صلاحیت ہوتی ہے۔ کدو کش کھیرے میں چند چائے کے چمچ لیموں کا رس شامل کرکے دانوں پر لگایا جائے تو اس سے کیل مہاسے مٹنا شروع ہو جاتے ہیں ۔

صحت بخش غذا کھائیں

آپ کی غذا آپکی جلد پر ایک نمایاں اثر ڈالتی ہے۔ خاص طور پر دانوں کیلئے۔ جو کھانے محفوظ کئے ہوتے ہیں اور زیادہ تیل میں پکے ہوتے ہیں وہ آپ کے جسم میں اور چہروں پر دانوں میں اضافہ کرنے کا سبب بنتے ہیں۔ زیادہ سے زیادہ پھل اور سبزیاں کھانا آپ کی صحت و جلد دونوں کے لیے اچھا ہے۔

احتیاط

دانوں کو چھونا یا چھیڑنا خطرناک ہو سکتا ہے۔ اسی طرح انہیں دبانے سے بھی انفیکشن ہونے کا خطرہ ہوتا ہے اور ان کے نشانات بھی چہرے پر رہ جاتے ہیں ۔ یہ متاثرہ حصہ کو سرخ اور سوجا ہوا بنانے کا باعث بنتے ہیں۔ اس کے علاوہ ان سے نکلنے والے جراثیم صاف جلد پر بھی اپنی جگہ بنالیتے ہیں یوں انہیں جلد کو خراب کرنے کا موقع مل جاتا ہے۔ کوشش کریں کہ حتیٰ الامکان آپ کا ہاتھ متاثرہ جگہ پر نہ جائے۔

اس کے علاوہ غیر معیاری کاسمیٹکس مصنوعات سے گریز کریں۔ کیونکہ ایسی بیشتر مصنوعات موجود ہیں جو غیر معیاری ہونے کے باعث جلد کو بہتر بنانے کی بجائے اس میں بگاڑ پیدا کر رہی ہیں۔