ہونٹ چہرے کا سب سے پرکشش حصہ ہیں

ہونٹ ہمارے چہرے کا سب سے زیادہ حساس خوبصورت اور پرکشش حصہ ہیں۔ چہرے کی خوبصورتی، رعنائی اور تازگی میں جو کردار ہونٹ ادا کرتے ہیں وہ چہرے کا کوئی اور عضو نہیں کرسکتا۔ بعض خواتین کے قدرتی گلابی ہونٹ کالے پڑ جاتے ہیں جن سے ہونٹوں کی خوبصورتی ماند ہو جاتی ہے۔ اگرچہ ہونٹوں کو خوبصورت بنانے کیلئے لپ اسٹک استعمال کی جاسکتی ہے لیکن ہونٹوں کا کالا پن دور کرنے کے لئے کئی طریقے بھی موجود ہیں۔

اگر آپ کے ہونٹوں پر کالا پن پیدا ہو گیا ہو تو انہیں دوبارہ گلابی بنانے کے لئے ناریل کے تیل میں لیموں ملا کر رکھ لیں اور دن میں کئی مرتبہ اسے ہونٹوں پر لگائیں اوراگر انار کا موسم ہے تو روزانہ ایک قندھاری انار ضرور کھائیں، ساتھ ساتھ نظام ہاضمہ کو فعال رکھیں۔

اگر آپ کے ہونٹ پھٹ گئے ہوں تو تھوڑا سا شہد لے کر چند قطرے لیموں کے ڈال کر پندرہ منٹ تک ہونٹوں پر لگائیں، پھر دھوکر بالائی لگائیں، یہ شکایت معدے کی خرابی کی وجہ سے ہوتی ہے۔ اس لیے معدے کو درست رکھیں دن میں دو تین مرتبہ سنگترے کے چھلکے کا رس ہونٹوں پر لگائیں، ایک گھنٹے کے بعد نیم گرم پانی سے صاف کرلیں۔ ہونٹوں پرقدرتی سرخی پیدا کرنے کے لئے روزانہ رس دار پھلوں کا استعمال کریں اس کے علاوہ دودھ کی بالائی بھی پھٹے ہوئے ہونٹوں کے لئے مفیدرہتی ہے۔

 

ہونٹوں کی خوبصورتی کے لئے چند ٹپس:

ہوٹوں کو سنہری اور دلآویز بنانے کے لئے لپ اسٹک استعمال کرنے سے پہلے تھوڑی سی فاؤنڈیشن لگالینی چاہیے۔ اس سے وہ ناگوار لائنیں غائب ہوجائیں گی جو بڑھتی ہوئی عمر کی نشاندہی کرتی ہیں۔

ہونٹوں پرقدرتی سرخی لانے کے لئے ذرا سا زعفران پیس کر بالائی میں ملا کر ہونٹوں پر لگائیں، چند منٹ کے بعد صاف کرلیں۔ اس طرح ہونٹ نرم رہیں گے۔

ہونٹوں کے بل دور کرنے کے لیے کچے دودھ کی کریم سوتے وقت ہونٹوں پر لگائیں، اس کے علاوہ روغن زیتون اور تربوز کے بیج بھی استعمال کئے جاسکتے ہیں۔ ان کو پیس کر روغن بادام میں ملا کر رات کو ہونٹوں پر لگائیں اور صبح دھو لیں۔

ہونٹوں کو پتلا اور خوبصورت بنانے کے لیے پسی ہوئی پھٹکری، گلاب کا عرق اور چار قطرے لیموں کا رس لیں اور ان تینوں کو ملا کر دن میں دو تین مرتبہ اور رات کو سوتے وقت لگائیں۔ اس طرح ہونٹ نہ صرف پتلے اور خوبصورت ہوں گے بلکہ ان کا کالا پن بھی دور ہو جائے گا۔